دی نیوز اردو

بھارتی رہنماوں نے عمران خان کو اصل ہیروقرار دے دیا

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کے اعلان کا بھارتی صحافیوں اور سیاستدانوں کی جانب سے خیر مقدم کیا گیا ہے۔وزیراعظم عمران خان نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب میں گرفتار بھارتی ائیر فورس کے پائلٹ ابھی نندن کو جذبہ خیر سگالی کے طور پر رہا کرنے کا اعلان کیا ہے جسے آج واگہ بارڈرکے راستے بھارت کے حوالے کیا جائے گا۔

بھارتی وزیراورسابق کرکٹرنوجوت سنگھ سدھو نے کہا کہ ‘عمران خان آپ کا خیرسگالی کا اقدام اربوں لوگوں اور قوم کی خوشی کا سبب بنا ہے۔نامور اور ایوارڈ یافتہ بھارتی صحافی برکھا دت نے وزیراعظم عمران خان کی جانب سے بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کے اعلان کا خیر مقدم کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستانی وزیراعظم کے اس اقدام سے کشیدگی میں کمی کا دروازہ کھل گیا ہے۔برکھا دت نے مزید کہا کہ یہ بھارتی ٹی وی اینکروں کی بےوقوفی کا وقت نہیں ہے۔ سینئر بھارتی صحافی اور بزنس اسٹینڈرڈ کے کالم نگار اجے شکلا نے وزیراعظم عمران خان کے بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کے فیصلے پر اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ اصل لڑائی میں چاہے کچھ بھی ہو لیکن پاکستان نے تاثر کی جنگ جیت لی ہے۔
معروف بھارتی صحافی ادتیہ مینن نے کہا ہے کہ بھارتی حکومت کے لیے عمران خان کا اعلان بالکل غیر متوقع تھا۔ادتیہ مینن نے کہا کہ پاکستانی وزیراعظم کے اس اقدام کا سہرا بھارت میں کسی کے بھی سر نہیں جاتا ۔سینئر صحافی اور مصنفہ ساگریکا گھوش نے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ عمران خان کی جانب سے بھارتی پائلٹ کو رہاکرنے کا اقدام امن کا اقدام ہے ۔انہوں نے ‘ ویل ڈن عمران خان’ لکھ کر وزیراعظم پاکستان کے فیصلے کو سراہا۔

مقبوضہ کشمیر کی سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے وزیراعظم پاکستان کی جانب سے بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کے اعلان کا خیر مقدم کیا ہے ۔ایک بیان میں محبوبہ مفتی نے کہا کہ یہ پاکستان کا اچھا اقدام ہے،اسے یک طرفہ نہیں دیکھنا چاہیے، یہ اقدام ایسے وقت سامنے آیا جب پاکستان کشیدگی بڑھا سکتا تھا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے اس اقدام کو مفاہمت کے طورپردیکھتی ہوں، بھارتی حکومت کوبھی اس کا جواب دینا چاہیے۔ مقبوضہ کشمیر کے سابق وزیراعلیٰ عمر عبد اللہ نے کہا ہے کہ انھیں یہ جان کر بہت خوشی ہوئی ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے بھارت کے ونگ کمانڈر ابھی نندن کی رہائی کا اعلان کر دیا ہے۔
بھارت کےنامور سینئر صحافی اور مصنف راج دیپ سرڈیسائی نے کہا ہے کہ بھارت میں چاہے ہمیں پسند آئے یا نہیں ، لیکن اخلاقی اعتبار سے اس وقت جیت عمران خان کی ہو رہی ہے۔ انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ ایسے وقت میں ہمارے لیڈر اپنےووٹ گننے میں مصروف ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: